قائد تحریک صوبہ پوٹھوہار راجہ اعجاز اور ترجمان وچیف آرگنائزرارشد سلہری کا خصوصی انٹرویو نیاصوبہ پوٹھوہار کی تحریک کے متعلق انہوں نےلائیو انٹرویو میں کیا کہا مکمل انٹرویو سُننے کیلئے تصویر پر کلک کریں۔

قائد تحریک صوبہ پوٹھوہار راجہ اعجاز اور ترجمان وچیف آرگنائزرارشد سلہری کا خصوصی انٹرویو نیاصوبہ پوٹھوہار کی تحریک کے متعلق انہوں نےلائیو انٹرویو میں کیا کہا مکمل انٹرویو سُننے کیلئے تصویر پر کلک کریں۔

صراط مستقیم یعنی راہ راست کانام سیاست نہیں ، کیونکہ '' پلٹنا جھپٹنا اورجھپٹ کرپلٹنا '' میدان سیاست کی مہارت اور بنیادی ضرورت ہے۔شعبہ سیاست میںچارقدم اگربڑھنے کیلئے کبھی دوقدم پیچھے بھی ہٹنا پڑتا ہے۔سیاست سانپ اورسیڑھی کے کھیل کی مانند ہے جولوگ یہ کھیلتے رہے ہیں انہیں بخوبی اندازہ ہوگا۔میں عینی شاہدہوں کئی سیاستدانوں نے دوچاربار زیروسے سٹارٹ لیااورپھرکامیابی کی سیڑھی چڑھتے چلے گئے پھرانہیں روکنا محال ہوگیا جبکہ کچھ بلندی سے انتہائی پستی میں جاگرے اورپھرمقدرنے انہیں دوبارہ سنبھلنے اورکوئی چال چلنے کی مہلت نہیں دی۔زندگی کے دوسرے شعبوں کی طرح سیاست میں بھی سب کچھ انسان کی مرضی کے مطابق نہیں ہوتا

صراط مستقیم یعنی راہ راست کانام سیاست نہیں ، کیونکہ ” پلٹنا جھپٹنا اورجھپٹ کرپلٹنا ” میدان سیاست کی مہارت اور بنیادی ضرورت ہے۔شعبہ سیاست میںچارقدم اگربڑھنے کیلئے کبھی دوقدم پیچھے بھی ہٹنا پڑتا ہے۔سیاست سانپ اورسیڑھی کے کھیل کی مانند ہے جولوگ یہ کھیلتے رہے ہیں انہیں بخوبی اندازہ ہوگا۔میں عینی شاہدہوں کئی سیاستدانوں نے دوچاربار زیروسے سٹارٹ لیااورپھرکامیابی کی سیڑھی چڑھتے چلے گئے پھرانہیں روکنا محال ہوگیا جبکہ کچھ بلندی سے انتہائی پستی میں جاگرے اورپھرمقدرنے انہیں دوبارہ سنبھلنے اورکوئی چال چلنے کی مہلت نہیں دی۔زندگی کے دوسرے شعبوں کی طرح سیاست میں بھی سب کچھ انسان کی مرضی کے مطابق نہیں ہوتا

صراط مستقیم یعنی راہ راست کانام سیاست نہیں ، کیونکہ ” پلٹنا جھپٹنا اورجھپٹ کرپلٹنا ” میدان سیاست کی مہارت اور بنیادی ضرورت ہے۔شعبہ سیاست میںچارقدم اگربڑھنے کیلئے کبھی دوقدم پیچھے بھی ہٹنا پڑتا ہے۔سیاست سانپ اورسیڑھی کے کھیل کی…

LISTEN SHAKIR QURESHI LIVE INTERVIEWشاکر قریشی کا لائیو انٹرویو ادارہ آپ کی آواز پر لیا گیا سُننے کیلئے آپ فوٹو پر کلک کریں انہوں نے کیا کہا۔

LISTEN SHAKIR QURESHI LIVE INTERVIEWشاکر قریشی کا لائیو انٹرویو ادارہ آپ کی آواز پر لیا گیا سُننے کیلئے آپ فوٹو پر کلک کریں انہوں نے کیا کہا۔

ڈنمارک ریڈیو سے "آپ کی آواز" پروگرام میں بلآخر میری بات ہو ہی گئی . بہت بہت شکریہ راجہ غفور صاحب . جو کہ اس پروگرام کے اینکر بھی ہیں . کئی ہفتوں سے آپ مجھے سے رابطہ کرنا چاہ رہے تھے . لیکن میری مصروفیات کے سبب آپ سے بات نہیں ہو پا ریی تھی . جس کا مجھے بھی افسوس تھا . میں چونکہ خود سے رابطے کر کے منتیں کر کے کہیں بھی ریڈیو اور ٹی وی پر اپنے انٹرویوز کروانے کے شوق نہیں رکھتی . اس لیئے اپنے کاموں پر ہی توجہ مرکوز رکھتی ہوں . . لیکن آپکا اصرار اور خلوص دیکھ کر مجھے بھی آپ کے پروگرام میں بات کرنا مناسب لگا . آپ نے مجھے کھل کر اظہار خیال کا موقع دیا . جس کے لیئے میں آپ کی تہہ دل سے ممنون ہوں . سٹوڈیو میں آپ کیساتھ موجود سیاسی اور سماجی شخصیت بہت پیاری اور جرات مند خاتون لبنی الہی صاحبہ بھی موجود تھیں ان سے بات کر کے بھی دلی مسرت ہوئی . 2015 میں صدف مرزا صاحبہ کی تنظیم کی جانب سے خواتین کے ووٹنگ رائٹس کی صد سالہ تقریبات کے حوالے سے ایک کانفرنس میں شرکت کرنے کا موقع ملا تھا تو وہیں لبنی الہی صاحبہ سے بھی ایک خوبصورت ملاقات ہوئی تھی . ان کے کام.انکی پہچان ہیں ماشاءاللہ . ڈنمارک کوپن ہیگن اور صدف مرزا صاحبہ (جو.ہماری بیحد پیاری دوست ہیں ) ایک ساتھ اپنی پہچان رکھتے ہیں . ان کے بعد آج مدت بعد کے بعد آپ سے بات ہوئی تو بہت اچھا لگا ا . . تارکین وطن کی رہنمائی اور اصلاح کے حوالے سے آپ کے ریڈیو کی کوششیں.قابل قدر ہیں . آپ اور آ پکے سامعین سلامت رہیں ۔ممتاز ملک کا مکمل انٹر ویو سُننے کیلئے تصویر پر کلک کریں۔

ڈنمارک ریڈیو سے “آپ کی آواز” پروگرام میں بلآخر میری بات ہو ہی گئی . بہت بہت شکریہ راجہ غفور صاحب . جو کہ اس پروگرام کے اینکر بھی ہیں . کئی ہفتوں سے آپ مجھے سے رابطہ کرنا چاہ رہے تھے . لیکن میری مصروفیات کے سبب آپ سے بات نہیں ہو پا ریی تھی . جس کا مجھے بھی افسوس تھا . میں چونکہ خود سے رابطے کر کے منتیں کر کے کہیں بھی ریڈیو اور ٹی وی پر اپنے انٹرویوز کروانے کے شوق نہیں رکھتی . اس لیئے اپنے کاموں پر ہی توجہ مرکوز رکھتی ہوں . . لیکن آپکا اصرار اور خلوص دیکھ کر مجھے بھی آپ کے پروگرام میں بات کرنا مناسب لگا . آپ نے مجھے کھل کر اظہار خیال کا موقع دیا . جس کے لیئے میں آپ کی تہہ دل سے ممنون ہوں . سٹوڈیو میں آپ کیساتھ موجود سیاسی اور سماجی شخصیت بہت پیاری اور جرات مند خاتون لبنی الہی صاحبہ بھی موجود تھیں ان سے بات کر کے بھی دلی مسرت ہوئی . 2015 میں صدف مرزا صاحبہ کی تنظیم کی جانب سے خواتین کے ووٹنگ رائٹس کی صد سالہ تقریبات کے حوالے سے ایک کانفرنس میں شرکت کرنے کا موقع ملا تھا تو وہیں لبنی الہی صاحبہ سے بھی ایک خوبصورت ملاقات ہوئی تھی . ان کے کام.انکی پہچان ہیں ماشاءاللہ . ڈنمارک کوپن ہیگن اور صدف مرزا صاحبہ (جو.ہماری بیحد پیاری دوست ہیں ) ایک ساتھ اپنی پہچان رکھتے ہیں . ان کے بعد آج مدت بعد کے بعد آپ سے بات ہوئی تو بہت اچھا لگا ا . . تارکین وطن کی رہنمائی اور اصلاح کے حوالے سے آپ کے ریڈیو کی کوششیں.قابل قدر ہیں . آپ اور آ پکے سامعین سلامت رہیں ۔ممتاز ملک کا مکمل انٹر ویو سُننے کیلئے تصویر پر کلک کریں۔

listen shakir qureshi live interviewشاکر قریشی کا لائیو انٹرویو ادارہ آپ کی آواز پر لیا گیا سُننے کیلئے آپ فوٹو پر کلک کریں انہوں نے کیا کہا۔

listen shakir qureshi live interviewشاکر قریشی کا لائیو انٹرویو ادارہ آپ کی آواز پر لیا گیا سُننے کیلئے آپ فوٹو پر کلک کریں انہوں نے کیا کہا۔

 

ڈنمارک آپکی آواز برطانیہ۔۔۔ہیومن رائٹس موومنٹ انٹرنیشنل برطانیہ کے صدرانا بشارت علی خاں نے کہا ہے کہ برماحکومت کی بربریت بے نقاب ہوگئی ، مقتدرقوتوں کوبرما کے بیگناہ مسلمانوں کیخلاف بدترین ظلم روکنا ہوگا۔مختلف مہذب ملکوں کی طرف سے برما حکومت کی مذمت کافی نہیں، اس دہشت گردریاست کی شدیدمرمت کرناہوگی۔کوئی انسان اس قدر درندگی کے ساتھ دوسرے انسان کی زندگی نہیں چھین سکتا ،برماکے حکمران شیطان ہیںاورکوئی شیطان قابل رحم نہیں ہوسکتا۔اگراقوام متحدہ مجرمانہ طورپرخاموش ہے تواوآئی سی نے بھی برمامسلمانوں کے زخم پر مرہم لگانے کیلئے کچھ نہیں کیا۔امن اورانسانیت کی بقاءکیلئے برماحکومت کیخلاف جنگ کا نقارہ بجاناہوگا۔یذیر اورفرعون موت کی آغوش میں چلے گئے مگران کی باقیات انسانیت کوملیامیٹ کرنے کے درپے ہیں۔کیا برما کے حکمران اقوام متحدہ کوجوابدہ نہیں،اقوام متحدہ مسلمانوں کے انفرادی واجتماعی حقوق کی حفاظت کیوں نہیں کرتا ۔

ڈنمارک آپکی آواز برطانیہ۔۔۔ہیومن رائٹس موومنٹ انٹرنیشنل برطانیہ کے صدرانا بشارت علی خاں نے کہا ہے کہ برماحکومت کی بربریت بے نقاب ہوگئی ، مقتدرقوتوں کوبرما کے بیگناہ مسلمانوں کیخلاف بدترین ظلم روکنا ہوگا۔مختلف مہذب ملکوں کی طرف سے برما حکومت کی مذمت کافی نہیں، اس دہشت گردریاست کی شدیدمرمت کرناہوگی۔کوئی انسان اس قدر درندگی کے ساتھ دوسرے انسان کی زندگی نہیں چھین سکتا ،برماکے حکمران شیطان ہیںاورکوئی شیطان قابل رحم نہیں ہوسکتا۔اگراقوام متحدہ مجرمانہ طورپرخاموش ہے تواوآئی سی نے بھی برمامسلمانوں کے زخم پر مرہم لگانے کیلئے کچھ نہیں کیا۔امن اورانسانیت کی بقاءکیلئے برماحکومت کیخلاف جنگ کا نقارہ بجاناہوگا۔یذیر اورفرعون موت کی آغوش میں چلے گئے مگران کی باقیات انسانیت کوملیامیٹ کرنے کے درپے ہیں۔کیا برما کے حکمران اقوام متحدہ کوجوابدہ نہیں،اقوام متحدہ مسلمانوں کے انفرادی واجتماعی حقوق کی حفاظت کیوں نہیں کرتا ۔

ڈنمارک۔۔سٹیٹ منسٹر مسلم لیگ ن چوہدری جعفر اقبال نے ادارہ آپکی آواز کو خصوصی طور پر لائیو انٹرویو دیتے ہوئے اُنہوں نے کیا کہا تصویر پر کلک کریں اور مکمل انٹرویو سُنیں۔

ڈنمارک۔۔سٹیٹ منسٹر مسلم لیگ ن چوہدری جعفر اقبال نے ادارہ آپکی آواز کو خصوصی طور پر لائیو انٹرویو دیتے ہوئے اُنہوں نے کیا کہا تصویر پر کلک کریں اور مکمل انٹرویو سُنیں۔