ناروے۔ یوم پاکستان کے سلسلہ میں زھرہ منظور ویلفیئر سوسائٹی ناروے کے زیر اہتمام ایک پُروقار تقریب فوٹو پر کلک کریں ۔

ناروے۔ یوم پاکستان کے سلسلہ میں زھرہ منظور ویلفیئر سوسائٹی ناروے کے زیر اہتمام ایک پُروقار تقریب فوٹو پر کلک کریں ۔

آپکی۔آواز۔۔۔۔اوسلو( عقیل قادر)یوم پاکستان تاریخ پاکستان کا بہت اہم دن ہے اس دن قرارداد پاکستان پیش کی گئی اور قائد اعظم محمد علی جناح ؒ کی قیادت میں صرف سات سال کے عرصہ میں اسلامی جمہوریہ پاکستان دنیا کے نقشے…

 ناروے۔ انٹرنیشنل ہیلتھ اینڈ سوشل گروپ کے زیر اہتمام خواتین کے عالمی دن کی تقریب میں پاکستانی سفیر رفعت مسعود کی خصوصی شرکت

ناروے۔ انٹرنیشنل ہیلتھ اینڈ سوشل گروپ کے زیر اہتمام خواتین کے عالمی دن کی تقریب میں پاکستانی سفیر رفعت مسعود کی خصوصی شرکت

  آپکی آواز۔۔۔اوسلو۔(عقیل قادر)انٹرنیشنل ہیلتھ اینڈ سوشل گروپ نے خواتین کے عالمی دن کے موقع پر ایک خصوصی تقریب کا اہتمام کیا جس میں دنیا کے مختلف ممالک سے خواتین نے شرکت کی۔ پروگرام کی مہمان خصوصی ناروے میں پاکستانی…

ناروے۔ ممتاز قادری کی پھانسی پر ردعمل، اوسلو میں پاکستان ایمبیئسی کے سامنے پُرامن احتجاجی مظاہرہ

ناروے۔ ممتاز قادری کی پھانسی پر ردعمل، اوسلو میں پاکستان ایمبیئسی کے سامنے پُرامن احتجاجی مظاہرہ

اوسلو(عقیل قادر)ناروے کے دارالحکومت اوسلو میں پاکستان ایمبیئسی کے سامنے مسلم ایجوکیشن اینڈ ویلفیئر فورم کے زیر اہتمام ممتاز قادری کوپھانسی دینے کے حوالے سے ایک پُرامن احتجاجی مظاہرہ کیا گیا جس میں خواتین و حضرات نے سخت سردی کے…

ناروے۔ اوسلو میں 45 سال بعد سو فیصد حلال کھانے فراہم کرنے والے ریسٹورنٹ کا قیام

ناروے۔ اوسلو میں 45 سال بعد سو فیصد حلال کھانے فراہم کرنے والے ریسٹورنٹ کا قیام

آپ کی آوازاوسلو۔۔۔۔(عقیل قادر) ایک اندازے کے مطابق ناروے میں مسلمانوں کی آبادی ایک لاکھ ساٹھ ہزار کے قریب ہے جس میں پاکستانیوں کی تعداد 35 ہزار ہے ۔ پاکستانیوں کی اکثریت اوسلو اور گردونواح میں مقیم ہے ۔ناروے میں…

   نئے گورنر.....اقبال ظفر جھگڑا 17 مئی 1947 کو پشاور کے نواحی گاوں جھگڑا میں پیدا ہوئے ۔ ان کے دادا ابراھیم خان جھگڑا اور والد ملک مظفر خان جھگڑا تحریک پاکستان کے کارکن تھے ۔ 1969 میں پشاور انجنیئرنگ کالج سے سول انجینئرنگ کی ۔ 1970 میں ائریگیشن ڈیپارٹمنٹ میں بطور ایس ڈی او فرائض سرانجام دیے اور 1977 میں سعودیہ عربیہ میں ملازمت کی، 1984 میں مسلم لیگ ن میں شمولیت اختیار کی، 1988 میں مسلم لیگ ن پشاور کے صدر، 1996 میں صوبائی سنئیر نائب صدر ،1997 میں پہلی دفعہ سینٹر منتخب ہوئے ۔ سینٹ میں ڈیفنس کمیٹی کے چیئرمین اور وزیراعظم کے مشیر 1998 میں صوبائی جنرل سیکرٹری منتخب ہوئے۔ اقبال ظفر جھگڑا 12 اکتوبر 1999 کے بعد جمہوریت کے بحالی کیلئے میدان عمل میں نکل آئے۔ وہ 3 دسمبر 2000 کو اے آر ڈی کے پہلے سیکرٹری جنرل بنے،بعدازاں 25 دسمبر کو پارٹی کے بھی سیکرٹری جنرل بنے، جبکہ ستمبر 2006 میں اے پی ڈی ایم کے بھی سیکرٹری جنرل رہے۔ وہ دسمبر 2009 میں دوسری مرتبہ سینٹر بنے ۔ اقبال ظفر جھگڑا پاکستان کے تاریخ میں کسی بھی جمہوریت کیلئے جدوجہد کی تحریک کے طویل ترین عرصہ سیکرٹری جنرل کے عہدے پر فائز رہنے والے رہنما ہیں، اقبال ظفر جھگڑا پچھلے سال ایک مرتبہ پھر اسلام آباد سے سینٹر منتخب ہوئے، وہ سینٹ میں مسلم لیگ ن کے پارلیمانی لیڈر کیساتھ ساتھ پانی و بجلی کے قائمہ کمیٹی کے چیرمین بھی رہے

نئے گورنر…..اقبال ظفر جھگڑا 17 مئی 1947 کو پشاور کے نواحی گاوں جھگڑا میں پیدا ہوئے ۔ ان کے دادا ابراھیم خان جھگڑا اور والد ملک مظفر خان جھگڑا تحریک پاکستان کے کارکن تھے ۔ 1969 میں پشاور انجنیئرنگ کالج سے سول انجینئرنگ کی ۔ 1970 میں ائریگیشن ڈیپارٹمنٹ میں بطور ایس ڈی او فرائض سرانجام دیے اور 1977 میں سعودیہ عربیہ میں ملازمت کی، 1984 میں مسلم لیگ ن میں شمولیت اختیار کی، 1988 میں مسلم لیگ ن پشاور کے صدر، 1996 میں صوبائی سنئیر نائب صدر ،1997 میں پہلی دفعہ سینٹر منتخب ہوئے ۔ سینٹ میں ڈیفنس کمیٹی کے چیئرمین اور وزیراعظم کے مشیر 1998 میں صوبائی جنرل سیکرٹری منتخب ہوئے۔ اقبال ظفر جھگڑا 12 اکتوبر 1999 کے بعد جمہوریت کے بحالی کیلئے میدان عمل میں نکل آئے۔ وہ 3 دسمبر 2000 کو اے آر ڈی کے پہلے سیکرٹری جنرل بنے،بعدازاں 25 دسمبر کو پارٹی کے بھی سیکرٹری جنرل بنے، جبکہ ستمبر 2006 میں اے پی ڈی ایم کے بھی سیکرٹری جنرل رہے۔ وہ دسمبر 2009 میں دوسری مرتبہ سینٹر بنے ۔ اقبال ظفر جھگڑا پاکستان کے تاریخ میں کسی بھی جمہوریت کیلئے جدوجہد کی تحریک کے طویل ترین عرصہ سیکرٹری جنرل کے عہدے پر فائز رہنے والے رہنما ہیں، اقبال ظفر جھگڑا پچھلے سال ایک مرتبہ پھر اسلام آباد سے سینٹر منتخب ہوئے، وہ سینٹ میں مسلم لیگ ن کے پارلیمانی لیڈر کیساتھ ساتھ پانی و بجلی کے قائمہ کمیٹی کے چیرمین بھی رہے

اسلم مہر۔۔۔۔حکومت پنجاب نے مقامی حکومت دوسری ترمیم2016ء آرڈیننس جاری کردیا جس کے تحت اب مخصوص نشستوں پر انتخابات نہیں ہوں گے

اسلم مہر۔۔۔۔حکومت پنجاب نے مقامی حکومت دوسری ترمیم2016ء آرڈیننس جاری کردیا جس کے تحت اب مخصوص نشستوں پر انتخابات نہیں ہوں گے

حکومت پنجاب نے مقامی حکومت دوسری ترمیم2016ء آرڈیننس جاری کردیا جس کے تحت اب مخصوص نشستوں پر انتخابات نہیں ہوں گے ۔ تفصیلات کے مطابق حکومت پنجاب نے گزشتہ رات لوکل گورنمنٹ سیکنڈ ترمیم 2016ء آرڈیننس جاری کردیا ہے جس…

 آپکی آواز۔۔۔۔۔۔اوسلو(عقیل قادر) پی آئی اے کی لاجواب سروس کی کئی کہانیاں منظر عام پر آ چکی ہیں مگر لگتا ہے کہ انہوں نے اپنے معاملات درست نہ کرنے کی قسم کھا رکھی ہے۔پی آئی اے کی کوئی انہونی بات انہونی نہیں لگتی کیونکہ پی آئی اے سے سب کچھ ممکن ہے۔ ہفتہ کی رات پی آئی اے کی فلائٹ اوسلو ایئر پورٹ سے اسلام آباد کے لیے روانہ ہونا تھی اور پی آئی اے مسافروں کو تو لے اڑی البتہ ان بیچارے مسافروں کا سامان اوسلو ایئرپورٹ بھول گئی۔ اسلام آباد ایئرپورٹ میں مسافروں کو دو گھنٹے انتظار کے بعد بتایا گیا کہ سامان کا کنٹینر اوسلو ہی بھول گئے ہیں اب آپ کا سامان ایک ہفتے تک آنے کی توقع ہے۔ کئی مسافروں نے اس پر شدید احتجاج بھی کیا اور کہا کہ ایک تو ہمارا سامان لانا بھول گئے ہیں اور دوسرا جو کھانا دوران سفر دیا گیا اس میں حیران کن اور شرمناک تبدیلی یہ کی کہ چاولوں میں سے چکن کو غائب کر دیا گیا۔ کئی مسافروں نے شبہ ظاہر کیا ہے کہ پی آئی اے کا عملہ کیٹرنگ والے سے گوشت کے پیسے اپنی جیب میں ڈال لیتا ہے، اس تبدیلی کی شکایت فلائٹ سپروائزر سے کی تو وہ اس سے لا علم تھا۔ مسافروں کا کہنا تھا کہ ایسی صورتحال ناقابل قبول ہے اور پی آئی اے کی انتظامیہ کو ذمہ داران کے خلاف کاروائی کرنی چاہیے۔

آپکی آواز۔۔۔۔۔۔اوسلو(عقیل قادر) پی آئی اے کی لاجواب سروس کی کئی کہانیاں منظر عام پر آ چکی ہیں مگر لگتا ہے کہ انہوں نے اپنے معاملات درست نہ کرنے کی قسم کھا رکھی ہے۔پی آئی اے کی کوئی انہونی بات انہونی نہیں لگتی کیونکہ پی آئی اے سے سب کچھ ممکن ہے۔ ہفتہ کی رات پی آئی اے کی فلائٹ اوسلو ایئر پورٹ سے اسلام آباد کے لیے روانہ ہونا تھی اور پی آئی اے مسافروں کو تو لے اڑی البتہ ان بیچارے مسافروں کا سامان اوسلو ایئرپورٹ بھول گئی۔ اسلام آباد ایئرپورٹ میں مسافروں کو دو گھنٹے انتظار کے بعد بتایا گیا کہ سامان کا کنٹینر اوسلو ہی بھول گئے ہیں اب آپ کا سامان ایک ہفتے تک آنے کی توقع ہے۔ کئی مسافروں نے اس پر شدید احتجاج بھی کیا اور کہا کہ ایک تو ہمارا سامان لانا بھول گئے ہیں اور دوسرا جو کھانا دوران سفر دیا گیا اس میں حیران کن اور شرمناک تبدیلی یہ کی کہ چاولوں میں سے چکن کو غائب کر دیا گیا۔ کئی مسافروں نے شبہ ظاہر کیا ہے کہ پی آئی اے کا عملہ کیٹرنگ والے سے گوشت کے پیسے اپنی جیب میں ڈال لیتا ہے، اس تبدیلی کی شکایت فلائٹ سپروائزر سے کی تو وہ اس سے لا علم تھا۔ مسافروں کا کہنا تھا کہ ایسی صورتحال ناقابل قبول ہے اور پی آئی اے کی انتظامیہ کو ذمہ داران کے خلاف کاروائی کرنی چاہیے۔